لاگ ان
بدھ 06 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 30 نومبر 2022
لاگ ان
بدھ 06 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 30 نومبر 2022
لاگ ان / رجسٹر
بدھ 06 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 30 نومبر 2022
بدھ 06 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 30 نومبر 2022

 مسواک کرنے کا مسنون طریقہ کیا ہے؟ طولًا اور عرضًا سے کیا مراد ہے؟ کیا اس سے مسواک کا عرض مراد ہے؟

الجواب باسم ملهم الصواب

مسواک کرنے کا مسنون طریقہ یہ ہے کہ مسواک داہنے ہاتھ میں پکڑ کر داہنی طرف کے اوپر کے دانتوں پر ملتے  ہوئے بائیں طرف لے جائیں پھر اسی طرح داہنی طرف کے نیچے کے دانتوں پر  ملتے ہوئے بائیں طرف لے جائے، طولا اور عرضا سے یہی طریقہ مراد ہے۔ اور مسواک کر لینے کے بعد دھو کر اسے کہیں کھڑا کر دے۔

(و) ندب إمساكه (بيمناه) وكونه لينا، مستويا بلا عقد، في غلظ الخنصر وطول شبر. ويستاك عرضا لا طولا، ولا مضطجعا؛ فإنه يورث كبر الطحال، ولا يقبضه؛ فإنه يورث الباسور، ولا يمصه؛ فإنه يورث العمی، ثم يغسله، وإلا فيستاك الشيطان به، ولا يزاد علی الشبر، وإلا فالشيطان يركب عليه، ولا يضعه بل ينصبه، وإلا فخطر الجنون قهستاني. ويكره بمؤذ، ويحرم بذي سم. (الدر المختار، كتاب الطهارة)

والله أعلم بالصواب

فتویٰ نمبر4325 :

لرننگ پورٹل