لاگ ان / رجسٹر
جمعہ 19 شوال 1443 بہ مطابق 20 مئی 2022
لاگ ان / رجسٹر
جمعہ 19 شوال 1443 بہ مطابق 20 مئی 2022
لاگ ان / رجسٹر
جمعہ 19 شوال 1443 بہ مطابق 20 مئی 2022
جمعہ 19 شوال 1443 بہ مطابق 20 مئی 2022

سوال: کیا بغیر سحری کے نفلی روزہ رکھ سکتے ہیں؟اگر فجر کے بعد آنکھ کھلے۔

الجواب باسم ملهم الصواب

نفلی روزے کے لیے اگر صبح صادق سے زوال سے پہلے تک کچھ کھایا پیا نہ ہو تو روزہ کی نیت درست ہے۔ لہٰذا صورت مسئولہ میں فجر کے بعد آنکھ کھلنے کی صورت میں زوال سے پہلے تک روزے کی نیت کرنا درست ہے۔(1)

صحیح مسلم میں ہےعَنْ عَائِشَةَ أُمِّ الْمُؤْمِنِينَ قَالَتْ دَخَلَ عَلَيَّ النَّبِيُّ صَلَّی اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ ذَاتَ يَوْمٍ فَقَالَ هَلْ عِنْدَكُمْ شَيْءٌ فَقُلْنَا لَا قَالَ فَإِنِّي إِذَنْ صَائِمٌ(مسلم،کتاب الصیام،باب جواز صوم النافلة۔۔۔)ترجمہ:’’حضرت عائشہ صدیقہؓ فرماتی ہیں کہ ایک دن نبیﷺمیری طرف تشریف لائے تو آپﷺنے فرمایا کیا تمہارے پاس کچھ ہے؟ ہم نے عرض کیا نہیں، آپﷺنے فرمایا تو پھر میں روزہ رکھ لیتا ہوں۔

1۔ ونوع لا يشترط في تبييت النية وتعيينها: وهو ما يتعلق بزمان بعينه، كصوم رمضان، والنذر المعين زمانه، والنفل كله مستحبه ومكروهه، يصح بنية من الليل إلی ما قبل نصف النهار علی الأصح، ونصف النهار: من طلوع الفجر إلی وقت الضحوة الكبری.(الفقہ الاسلامی وادلتہ،الجزء الثالث،الباب الثالث فی الصیام والاعتکاف،الفصل الاول الصیام،مبحث شروط الصیام،شروط النیۃ، المالکیۃ)

والله أعلم بالصواب

فتویٰ نمبر1306 :

لرننگ پورٹل