لاگ ان
ہفتہ 02 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 26 نومبر 2022
لاگ ان
ہفتہ 02 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 26 نومبر 2022
لاگ ان / رجسٹر
ہفتہ 02 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 26 نومبر 2022
ہفتہ 02 جمادی الاول 1444 بہ مطابق 26 نومبر 2022

امام اگر کسی کے انتقال پرنماز کے بعد سورۃ الفاتحہ اور سورۃ الاخلاص اجتماعی طور پر پڑھا کر ایصال ثواب کے لیے دعا کرے تو کیا یہ عمل درست ہے؟

الجواب باسم ملهم الصواب

سوال ميں ذكر كرده طريقے پر اجتماعي طور پر سورة الفاتحه اور اخلاص پڑھنے سے آگے چل کر یہ ایک رسم بن جائے گی، محلہ میں جس شخص کا بھی انتقال ہوگا اس کے عزیز واقارب امام صاحب کو مجبور کریں گےکہ آپ اس طرح ہمارے عزیز کے حق میں بھی ایصال ثواب کریں۔ اس لیے اس طریقہ کو اختیار کرنا درست نہیں۔ البتہ میت کے حق میں دعا کروانے کے بعد نمازیوں میں یوں اعلان کردیا جائے کہ ہر شخص اپنے طور پر ذکر وتلاوت وغیرہ کے ذریعے میت کو ایصال ثواب کریں تو اس میں بظاہر کوئی قباحت نہیں۔ 

صرح علماؤنا في باب الحج عن الغير بأن للإنسان أن يجعل ثواب عمله لغيره صلاة أو صوما أو صدقة أو غيرها كذا في الهداية، بل في زكاة التتارخانية عن المحيط: الأفضل لمن يتصدق نفلا أن ينوي لجميع المؤمنين والمؤمنات لأنها تصل إليهم ولا ينقص من أجره شيء اهـ هو مذهب أهل السنة والجماعة (رد المحتار، كتاب الصلاة، باب صلاة الجنازة، مطلب في زيارة القبور)

والله أعلم بالصواب

فتویٰ نمبر4249 :

لرننگ پورٹل