لاگ ان / رجسٹر
بدھ 17 شوال 1443 بہ مطابق 18 مئی 2022
لاگ ان / رجسٹر
بدھ 17 شوال 1443 بہ مطابق 18 مئی 2022
لاگ ان / رجسٹر
بدھ 17 شوال 1443 بہ مطابق 18 مئی 2022
بدھ 17 شوال 1443 بہ مطابق 18 مئی 2022

حضرت مفتی صاحب یہ فرمائیں، آج کل جو آٹومیٹک کپڑے دھونے کی مشین استعمال ہورہی ہے، جس میں صرف کپڑے ڈال کر وقت طے کرنا پڑتا ہے جس میں مشین ایک بار سرف میں کپڑے دھوتی ہے اور پھر سارا پانی پھینک کر دوبارہ پانی لے کر کھنگالتی ہے اور پھر کپڑے نچوڑتی ہے۔ اگر اس میں پاک کپڑوں کے ساتھ ناپاک بھی ڈال دیے جائیں تو کیا سارے پاک ہوجائیں گے؟

الجواب باسم ملهم الصواب

کپڑے دھونے کی خود کار مشین وغیرہ میں پاک اور ناپاک کپڑے ایک ساتھ دھونا مناسب نہیں کیوں کہ پاک اور ناپاک کپڑے ایک ساتھ دھونے میں پاک کپڑے بھی ناپاک ہوجاتے ہیں؛ اس لیے پہلے ناپاک کپڑوں کی ناپاکی دور کردی جائے یا انھیں تین بار سادے پانی میں اچھی طرح نچوڑدیا جائے، اس کے بعد سب کپڑے ایک ساتھ دھوئے جائیں۔لیکن اگر کسی نے پاک اور ناپاک کپڑے خود کار مشین میں ایک ساتھ دھوئے توپاک اور ناپاک کپڑے اس وقت پاک ہوں گے، جب سب کپڑے باہر نکال کر تین مرتبہ اچھی طرح بھگو کر نچوڑے جائیں یا پھر  مشین میں کپڑوں سے سرف کا پانی نکالتے وقت خوب زیادہ مقدار میں پانی جاری کردیا جائے تو اس سے بھی کپڑے پاک ہوجائیں گے۔

(ألف) الثوب إذا تنجس ووجب غسله ثلاث مرات. (الفتاوی الهندية، الباب السابع في النجاسة وأحكامها، الفصل الأول في تطهير الأنجاس)

(ب) أن المتنجس إما أن لا يتشرب فيه أجزاء النجاسة أصلا…أو يتشرب فيه قليلا كالبدن والخف والنعل أو يتشرب كثيرا۔۔۔وأما في الثالث فإن كان مما يمكن عصره كالثياب فطهارته بالغسل والعصر إلی زوال المرئية وفي غيرها بتثليثهما. (رد المحتار، كتاب الطهارة، باب الانجاس)

(ج) أما لو غسل في غدير أو صب عليه ماء كثير أو جری عليه الماء طهر مطلقا بلا شرط عصر وتجفيف وتكرار غمس. (رد المحتار،کتاب الطهارة، باب الأنجاس)

(د) وأما حكم الصب فإنه إذا صب الماء علی الثوب النجس إن أكثر الصب بحيث يخرج ما أصاب الثوب من الماء وخلفه غيره ثلاثا فقد طهر ؛ لأن الجريان بمنزلة التكرار والعصر والمعتبر غلبة الظن هو الصحيح. (البحر الرائق، کتاب الطهارة، قوله والنجس المرئي يطهر بزوال عين…)

والله أعلم بالصواب

فتویٰ نمبر4252 :

لرننگ پورٹل