لاگ ان
جمعہ 04 ربیع الاول 1444 بہ مطابق 30 ستمبر 2022
لاگ ان
جمعہ 04 ربیع الاول 1444 بہ مطابق 30 ستمبر 2022
لاگ ان / رجسٹر
جمعہ 04 ربیع الاول 1444 بہ مطابق 30 ستمبر 2022
جمعہ 04 ربیع الاول 1444 بہ مطابق 30 ستمبر 2022

آغا خانیوں کا کیا حکم ہے؟ کیا ان کے ساتھ کھانا کھاسکتے ہیں اور کیا ان کے گھر کا کھانا کھاسکتے ہیں؟ ہمارے آفس میں پچاس فیصد آغاخانی ہیں، یہ نہ نماز پڑھتے ہیں، نہ روزہ رکھتے ہیں اور نہ ہی پردے کا اہتمام کرتے ہیں۔ ان کے عقائد پر روشنی ڈالیے۔ 

الجواب باسم ملهم الصواب

 آغا خانیوں کا طریقہ نماز اور دعائیں مع چند کفریہ عقائد جو ان کے رسالہ ’’تقویۃ الایمان‘‘ میں لکھے گئے ہیں مختصراً درج ذیل ہیں:

نماز پڑھو، نماز پڑھو، نماز پڑھو، خدا تم کو برکت دے، خدا کا نام لو۔ خداوند شاہ علی تم کو ایمان اور اخلاق دے۔ یا شاہ میری شام کی نماز اور دعا قبول کر۔ جو حق تم کو ملا میں اس کا واسطہ دیتا ہوں۔ اے ہمارے آقا آغا سلطان محمد شاہ۔ اس کے بعد سجدہ کرو۔ اور اگر رات کی نماز ہو تو اس طرح کہو: میری شام کی اور رات کی دعائیں۔ اور اگر صبح کی نماز ہو تو اس طرح کہو: میری شام کی، رات کی اور صبح کی دعائیں۔ دوسری مرتبہ سجدہ کرو اور تسبیح پڑھو اور حسب ذیل طریقہ پر دعا و درود پڑھو۔

تسبیح: میں اپنے گناہوں پر پچھتاتا ہوں۔ دو مرتبہ۔ میں سر سے پاؤں تک تیرا قصور وار اور گنہگار ہوں۔ اے غفور رحیم شاہ! میرا گناہع معاف کر، پیر تیری ہی عبادت کرتے ہیں۔ بندہ دعا مانگتا ہے۔

اے سچے شاہ! تو منظور رکھنے والا ہے۔ میں شاہ کے اس فرمان کو سر اور آنکھوں پر رکھتا ہوں جو پیر کے ذریعہ مجھ کو ملا ہے۔ یہ کہہ کر تسبیح زمین پر رکھ دو۔ اور نیچے بتایا ہوا ورد کرو۔

أشهد، سبحان الله، لا إله إلا الله. الله أكبر، لا حول ولا قوة إلا بالله العلي العظيم، الرحمن، ذي الجلال والإكرام.

ان تمام صفتوں سے بنا ہوا قدوس، سب پر طاقتور خدا، ایران کے ضلع چالدیا میں انسان کا جسم لے کر ستر باپ کی پیٹھ سے نکلا۔ انہتر خدا ہو جانے کے بعد سترھویں اوتار کے نطفہ سے اڑتالیسواں امام، دسواں بے عیب اوتار۔ ہمارا خداوند آغا سلطان محمد شاہ داتا، اس کے بعد سجدہ کرو، حق شاہ اچھا دنیا اور زمین کا شاہ خلیفہ اور گدی کے جانشینوں کے نام کا وظیفہ کرو، دنیا میں اور زمین کے اچھوں کا نام یہ ہے:

شاہ کے خلیفہ ابو طالب ولی کا نام حسب ذیل ہے:

۱۔ہمارا سچا خداوند شاہ علی۔ ۲۔ہمارا سچا خداوند شاہ حسین۔

۳۔ہمارا سچا خداوند شاہ زین العابدین۔ ۴۔ہمارا سچا خداوند شاہ محمد باقر۔

۵۔ہمارا سچا خداوند شاہ حعفر صادق۔ ۶۔ہمارا سچا خداوند شاہ اسماعیل۔

۷۔ہمارا سچا خداوند شاہ محمد بن اسماعیل ۸۔ہمارا سچا خداوند شاہ رفیع احمد۔

۔۔۔ نمبر 46 تک مسلسل نام اور اس کے بعد

۴۷۔ہمارا سچا خداوند شاہ آغا علی شاہ۔ ۴۸۔ہمارا سچا خداوند شاہ آغا محمد شاہ داتا۔

اور اس وقت کے امامت کا مالک خداوند زماں۔ امام شیخ المشائخ، امامت کی طاقت رکھنے والا مانو، آغا سلطان محمد شاہ داتا، بے شمار کروڑوں آدمیوں کا دستگیر، اس وقت کی امامت کا مالک، اے شاہ! جو حق تم کو ملا ہے بہ طفیل اس کے اپنے حضور میں میری دعا منظور کر۔ اے ہمارے خداوند آقا سلطان محمد شاہ۔ (منقول از تقویۃ الایمان بحوالہ امداد الفتاویٰ: 12\ 240۔)

مذکورہ عقائد میں امام زمانہ کے لیے نبوت اور خدائی القابات و اختیارات کا اثبات بالکل واضح ہے۔ اس لیے اسماعیلی فرقہ زنادقہ کے حکم میں داخل ہے۔ بلا ضرورت شدیدہ ان کے ساتھ کھانا کھانا، یا انھیں اپنے ساتھ کھانا کھلانا وغیرہ جائز نہیں۔

يعلم مما هنا حكم الدروز والتيامنة فإنهم في البلاد الشامية يظهرون الإسلام والصوم والصلاة مع أنهم يعتقدون تناسخ الأرواح وحل الخمر والزنا وأن الألوهية تظهر في شخص بعد شخص ويجحدون الحشر والصوم والصلاة والحج، ويقولون المسمی به غير المعنی المراد ويتكلمون في جناب نبينا – صلی الله عليه وسلم – كلمات فظيعة. وللعلامة المحقق عبد الرحمن العمادي فيهم فتوی مطولة، وذكر فيها أنهم ينتحلون عقائد النصيرية والإسماعيلية الذين يلقبون بالقرامطة والباطنية الذين ذكرهم صاحب المواقف. ونقل عن علماء المذاهب الأربعة أنه لا يحل إقرارهم في ديار الإسلام بجزية ولا غيرها، ولا تحل مناكحتهم ولا ذبائحهم، وفيهم فتوی في الخيرية أيضا فراجعها (الدر المختار وحاشية ابن عابدين/ رد المحتار، 4/ 244)

والله أعلم بالصواب

فتویٰ نمبر4461 :

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔


لرننگ پورٹل